پاکستان میں مستحکم حکومت ضروری ہے، ظہیر عباس ایڈووکیٹ

مانچسٹر: پاکستان میں سیاسی استحکام ملکی معیشت کی مضبوطی اور عوام کی خوشحالی کی کنجی ثابت ہو سکتاہے۔ ملک میں غربت، بیروزگاری کی شرح بتدریج بلند ہونے کی وجہ سے غریب اور سفید پوش طبقہ دیوار کے ساتھ لگ چکا ہے، خط غربت سے نیچے زندگی بسر کرنے والوں کی تعداد بھی تیزی کے ساتھ بڑھتی جا رہی ہے۔

ان خیالات کا اظہار برطانیہ کی معروف سماجی شخصیت قانون دان ظہیر عباس چوہدری ایڈووکیٹ نے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ سرمایہ دار اپنی جمع پونجی سمیت بیرون ملک فرار ہونے کو ترجیح دے رہے ہیں، ایسے حالات میں انتخابات کے ذریعے ایک مستحکم حکومت کا قیام وقت کی اہم ضرورت ہے ۔

ظہیر عباس چوہدری ایڈووکیٹ نے کہا کہ تارکین وطن برطانیہ سمیت پوری دنیا میں اپنے ملک کی بہترین نمائندگی کا حق ادا کر رہے ہیں، ان کے دل اپنے پاکستانی بہن بھائیوں کے ساتھ دھڑکتے ہیں مگر بدقسمتی ہے کہ پاکستان کے بدترین معاشی حالات پر ان کا دل خون کے آنسو روتا ہے اور وہ اپنے پیاروں کے مستقبل کو لے کر ہر وقت پریشان نظر آتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن کو 8فروری کے عام انتخابات شفاف اور غیر جانبدار بنانے کے لیے جہاں موثر حکمت عملی اپنانے کی ضرورت ہے، وہیں اسے پر امن بنانے کیلئے افواج پاکستان، رینجرز اور دیگر قانون نافذ کرنے والے اداروں کا کردار بھی اہمیت کا حامل ہے۔

ظہیر عباس چوہدری ایڈووکیٹ نے مزید کہا کہ پاکستان میں جو بھی پارٹی برسر اقتدار آئے اوورسیز پاکستانیوں سمیت قوم کی امیدوں کا محور ہو گی، عوام معاشی استحکام اور غربت میں کمی چاہتے ہیں جس کے بغیر پاکستان کو موجودہ مسائل کی دلدل سے نہیں نکالا جا سکتا۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button