جہلم

محکمہ تحفظ جنگلی حیات کے ذمہ داران کی عدم دلچسپی، ضلع جہلم میں غیر قانونی شکار عروج پر

جہلم: محکمہ تحفظ جنگلی حیات کے ذمہ داران کی عدم دلچسپی، ضلع بھر میں غیر قانونی شکار عروج پر ، شکاری شکار گاہوں میں شکارکی تلاش میں دندناتے پھرتے نظرآنے لگے،محکمہ وائلڈ لائف کے ذمہ داران نے لا تعلقی اختیار کر لی۔

متعلقہ افسران ارباب اختیارکی آنکھوں میں دھول جھونکنے کے لئے بھی کبھار فرضی کارروائیاں کرکے سب اچھا ہے کی رپورٹ بھجوا دیتے ہیں، لیکن عملی اقدامات نہ ہونے کے برابر ہیں، ضلع جہلم کے مختلف علاقوں میں موجود شکار گاہوں جہاں تیتر ،بٹیر، جنگلی خرگوش، اڑیال سمیت نایاب نسل کے جانور اور پرندے موجود ہیں۔

دوسری جانب موسم سرما کے آغاز کے ساتھ ہی سائبرین پرندے یہاں آتے ہیں جنہیں بے رحمی سے شکار کیا جاتا ہے ،لیکن محکمہ تحفظ جنگلی حیات کا عملہ غفلت کی نیند سو رہا ہے۔

عوامی حلقوں نے ارباب اختیار سے مطالبہ کیا ہے کہ غیر قانونی شکار کی روک تھام اور جنگلی حیات کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے اور غیر قانونی شکار کرنے والوں کے خلاف وائلڈ لائف پروٹیکشن ایکٹ کے تحت کارروائیاں عمل میں لائی جائیں اور محکمہ تحفظ جنگلی حیات ضلع جہلم میں فرض شناس، ایماندار افسران کو تعینات کریں تاکہ نایاب نسل کے جانور اور پرندوں کو بچایا جا سکے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button