جہلم شہر میں تجاوزات مافیا کا راج، سڑکوں پر ٹریفک کا جام رہنا روزانہ کا معمول بن گیا

جہلم شہر میں تجاوزات مافیا کا راج، میونسپل کمیٹی کا انکروچمنٹ کا عملہ بری طرح ناکام، شہر کی سڑکوں پر ٹریفک کا جام رہنا روزانہ کا معمول بن گیا، میونسپل کمیٹی کی جانب سے تجاوزات مافیا کے خلاف کارروائیاں نہ کرنا ایم سی کی بدنامی کا باعث بننے لگا ،جی ٹی روڈ سے ملحقہ سروس روڈ کے ساتھ ساتھ شہرکی سڑکوں کے دونواں اطراف بااثر دکانداروں نے قبضے کر کے دکانیں سڑکوں پر قائم کر لیں۔

ریلوے روڈ سے لیکر ٹاہلیانوالہ تک شاندار چوک سے جادہ چوک ، شاندار چوک سے تھانہ صدر، شاندار چوک سے جی ٹی ایس چوک جانے والی سڑکوں کے دونوں اطراف قبضہ مافیا کا مکمل کنٹرول موجود ہے ، دوسری جانب ٹریفک پولیس خاموش تماشائی کا کردار ادا کررہی ہے ۔ جبکہ جی ٹی روڈ سے ملحقہ سروس روڈ پر تجاوزات کے باعث سروس بند ہونے سے شہریوں کو آمدورفت میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق میونسپل کمیٹی تجاوزات مافیا کیخلاف کارروائیاں کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے اور شعبہ انکروچمنٹ ایم سی کی بدنامی کا باعث بن رہا ہے ۔ شاندارچوک ، چوک گنبد والی مسجد، محمدی چوک ،قبرستان چوک ،جادہ چوک ، روہتاس چوک پر بااثر دکانداروں نے قبضہ کرکے اپنی اشیاء سڑکوں پر رکھ کر شہریوں کے لئے مشکلات پیدا کررکھی ہیں۔

جی ٹی روڈ سے ملحقہ سروس روڈ بھی قبضہ مافیا کے نرغے میں آچکی ہے ۔ موٹر وے پولیس سروس روڈکو واگزار کروانے کی بجائے ڈنگ ٹپاؤ پالیسی پر گامزن ہے ، جس کیوجہ سے سروس روڈ کا استعمال کرنے والے چھوٹی گاڑیوں اور موٹر سائیکل سواروں کو سخت مشکلات کا سامنا کرناپڑتا ہے ۔

میونسپل کمیٹی کا شعبہ انسدادِ تجاوزات کا عملہ تجاوزات ختم کروانے کی بجائے سرپرستی کرتا نظرآتا ہے ۔ میجر ملک محمد اکرم شہید نشان حیدر کی یادگار کے باہر میونسپل کمیٹی کے عملے کی سرپرستی میں درجنوں عارضی دکانیں قائم ہوچکی ہیں جو کہ ایم سی کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے۔

شہریوں کا ایڈمنسٹریٹرمیونسپل کمیٹی ، چیف آفیسر میونسپل کمیٹی سے مطالبہ کیاہے کہ روزانہ کی بنیاد پر دفتر جانے سے قبل اندرون شہر کے بازاروں اور چوک چوراہوں کا معائنہ کریں تاکہ سڑکوں پر قائم ہونے والی تجاوزات بارے علم ہو سکے ۔

شہریوں نے نگران وزیراعلیٰ پنجاب، چیف سیکرٹری پنجاب ، سیکرٹری بلدیات سے مطالبہ کیاہے کہ اندرون شہر میں قائم تجاوزات کے خاتمے کے لئے احکامات جاری کئے جائیں اور ریڑھی بانوں کو اولڈ جی ٹی روڈ پر یا رمضان بازار مشین محلہ میں منتقل کیاجائے تاکہ شہر کی سڑکیں کشادہ ہو سکیں اور شہریوں کو پیش آنے والی مشکلات کا خاتمہ ممکن ہو سکے ۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button