جہلماہم خبریں

ناقص اور غیرمعیاری میٹریل سے تیار کردہ شاپنگ بیگز میں اشیاء خوردونوش کی فروخت، بیماریاں پھیلنے لگیں

جہلم: سرکاری محکموں کی چشم پوشی،، ناقص، غیر معیاری میٹریل سے تیار کردہ شاپنگ بیگز میں اشیاء خوردونوش کی فروخت، مہلک امراض کی شرح میں تیزی سے اضافہ، شہری حلقوں کا اظہار تشویش، ارباب اختیار سے نوٹس لینے کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق جہلم شہر اور گردونواح میں غیر معیاری اور مضر صحت میٹریل سے تیار کردہ شاپنگ بیگز کے استعمال سے نہ صرف شہری ہیپاٹائٹس، ڈائریا، بخار اور دیگر موذی امراض میں مبتلا ہو رہے ہیں بلکہ صارفین کا مالی نقصان بھی ہو رہا ہے۔

معلوم ہوا ہے کہ شہر کی دکانوں، مارکیٹوں میں فوڈ گریڈ میٹریل سے کہیں دور انتہائی غیر معیاری مضر صحت میٹریل سے تیار کردہ شاپربیگ جو کہ تمام سائزوں میں دستیاب ہیں۔

شہر اور گردونواح کے دکاندار گاہکوں کو گوشت، چکن، دودھ، دہی،کھویا اور دیگر اشیاء خوردونوش انہی ناقص و غیرمعیاری مضر صحت شاپر بیگ میں ڈال کر تھما دیتے ہیں۔ ان شاپنگ بیگز میں کچھ دیر مذکورہ اشیاء پڑی رہنے کی صورت میں اشیاء سے بدبو آنا شروع ہو جاتی ہے جبکہ ان اشیاء کے استعمال سے شہری مختلف امراض کا شکار ہو رہے ہیں۔

شہری، سماجی، مذہبی، رفاعی، فلاحی تنظیموں کے عمائدین نے ڈی جی پنجاب فوڈ اتھارٹی سے مطالبہ کیا ہے کہ ناقص و غیر معیاری شاپر بیگ تیار کرنے اور استعمال کرنے والے دکانداروں پر پابندی عائد کی جائے تاکہ شہری بیماریوں سے محفوظ رہ سکیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button