جہلم

سردی کی شدت میں اضافہ، گرم کپڑوں اور جوتوں کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ

جہلم: سردی کی شدت میں اضافہ، گرم کپڑوں اور جوتوں کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ، متوسط اور غریب طبقہ کے افراد کے لئے تن کو ڈھانپنا چیلنج بن گیا۔

سردی کا موسم عروج پر آتے ہی زیب تن کئے جانے والے ملبوسات اور جوتوں کی قیمتوں میں دکانداروں نے خود ساختہ اضافہ کرکے مہنگائی کے ستائے لوگوں کی جیبوں پر ڈاکے ڈالنے کا عمل شروع کر رکھا ہے ، مذکورہ اشیاء کی قیمتوں میں کئی گنا اضافہ ہو جانے کی وجہ سے موجودہ حالات میں متوسط اور غریب طبقہ کے افراد کے لئے خود کو سردی سے محفوظ رکھنا کسی چیلنج سے کم نہیں رہا۔

اس حوالے سے شہریوں کا کہنا ہے کہ موسم سرما کے کپڑوں اور جوتوں کی قیمتوں کا درست انداز میں تعین نہ ہونے کی وجہ سے ہماری پریشانیوں میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے، مڈل کلاس اور غریب طبقہ تو پہلے ہی مہنگائی کی چکی میں پس رہا ہے۔ رہی سہی کسر خود ساختہ مہنگائی نے نکال دی ہے۔

شہریوں نے وزیراعظم پاکستان اور وزیراعلیٰ پنجاب سے اشیاء خوردنوش کے ساتھ ساتھ ضروریات زندگی سے تعلق رکھنے والی تمام اشیاء کی قیمتوں کو کنٹرول کرنے کے لئے الگ الگ سطح پر نرخ مقرر کروانے کا مطالبہ کیا ہے تا کہ شہری حکومت کے مقرر کردہ نرخوں کے مطابق ضروریات زندگی کی اشیاء خرید کر گزر بسر کر سکیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button