جہلم: مہنگائی مافیا بے لگام، گرانفروش بے قابو، دکانداروں نے اپنی الگ بادشاہت قائم کرلی

جہلم: مہنگائی مافیا بے لگام، گرانفروش بے قابو، پرائس کنٹرول مجسٹریٹس خاموش، دکانداروں نے اپنی الگ بادشاہت قائم کرلی۔ سبزی فروشوں نے پیاز 200 روپے، لہسن 650 ، آلو80 ، ٹماٹر 150 ، گاجر90 روپے فی کلو، جبکہ کم وزنی روٹی 20 سے 25 روپے میں فروخت کررہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق جہلم شہر اور گردو نواح میں پیاز 200 روپے، لہسن 650 ، آلو80 ، ٹماٹر 150 ، گاجر90 روپے فی کلو، گوبھی 100 ، شملہ 170روپے فی کلو فروخت کئے جارہے ہیں۔

انتظامیہ اور مارکیٹ کمیٹی کے مقررہ کردہ نرخوں کی بجائے سبزی فروشوں نے اپنے نرخ مقرر کر رکھے ہیں۔ کوئی سبزی ایسی نہیں جو 100 روپے فی کلو گرام سے کم ہو۔ ٹماٹر 150 روپے، کدو130 روپے، کریلے130 روپے کلو، مٹر150 روپے کلو ،پھول گو بھی 110 روپے کلومیں فروخت کیے گئے۔

اسی طرح شلجم 70 روپے ہری مرچ130 روپے کلو، کھیرا 90 روپے کلو ، ادرک450 روپے کلو، پالک 60 روپے فی کلو میں فروخت کی گئی ، سبزیوں اور مختلف اشیائے خورونوش کی قیمتیں آسمانوں سے باتیں کرتی دکھائی دیں۔ بیس سے پچیس روپے میں فروخت ہونے والی روٹی کا وزن انتہائی کم ہے۔

مہنگائی کے ستائے ہوئے شہریوں نے کہا کہ ڈپٹی کمشنر اور پر ائس کنٹرول مجسٹریٹس نے شہریوں کو ریلیف دینے کے حوالے سے خا موشی اختیار کر رکھی ہے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کاغذی کارروائیوں تک محدود ہیں انتظامیہ کی ڈنگ ٹپاؤ پالیسی نے مہنگائی مافیا کو بے لگام کر دیا ہے۔

شہریوں نے نگران وزیر اعلیٰ پنجاب اور چیف سیکرٹری پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button