جہلم

حالیہ سیلاب کی وجہ سے گندم کی پیداوار متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔ چوہدری مقصود احمد

جہلم: حالیہ سیلاب کی وجہ سے گندم کی پیداوار متاثر ہونے کا خدشہ ہے، اس لئے کاشتکاروں اور کسانوں کو اپنے علاقوں میں زیادہ سے زیادہ گندم کاشت کرنی چاہیے تا کہ اس دفعہ ہمارے ان علاقوں سے گندم کی زیادہ سے زیادہ پیداوار حاصل کی جا سکے۔

ان خیالات کا اظہار ڈپٹی ڈائریکٹر زراعت (توسیع) جہلم چوہدری مقصود احمد نے محکمہ زراعت (توسیع) جہلم کے زیراہتمام تحصیل جہلم کے گاؤں میانہ چک ڈیرہ چوہدری سجاد حسین میں منعقدہ پروگرام برائے زیادہ پیداواری مہم گندم سال 2022-23 کے دوران کاشتکاروں سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ محکمہ زراعت کے ماہرین اور کاشتکاروں کویہاں اکھٹا کرنے کا مقصد یہ ہے کہ کا شتکار بھائی گندم کی منظور شدہ اقسام کافی ایکڑ 45 تا 50 کلو گرام گریڈڈ بیج کو پھپھوندی کش زہر لگائیں کھادوں کا متوازن استعمال کرتے ہوئے گندم کو بذریعہ ڈرل کاشت کریں۔

انہوں نے کہا کہ جڑی بوٹیوں کا موثر کنٹرول اور گندم کو شگوفے، گوبھ اور دانے کی دودھیا حالت میں آبپاشی کا انتظام کریں اور کاشتکاروں پر زور دیا کہ وہ گھریلو پیمانے پر سبزیات کی کاشت کوترویج دیں اور دھان کے مڈھوں کو ہر گز نہ جلائیں تا کہ ماحولیاتی آلودگی سے بچا جا سکے اور فصلات کی پیداوار میں اضافہ اور کاشتکاروں کے مسائل کے ممکنہ حل کے لئے مفید مشورے دیئے گئے تا کہ کاشتکار بھائی امسال گندم کی بھرپور پیداوار حاصل کر کے اپنے ملک کو گندم کی پیداوار میں خود کفیل بنائیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ حکومت کی بھرپور کوشش ہے کہ کسانوں کو بروقت کھاد مہیا کی جائے اگر کھاد کی کوالٹی یا قیمت کے حوالے سے کاشتکاروں کو کوئی شکایت ہو تو محکمہ زراعت (توسیع) جہلم کو آگاہ کریں ہم ذمہ داران کے خلاف بھرپور کارروائی عمل میں لائیں گے۔

ماہرین و آفسران محکمہ زراعت (توسیع) اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر زراعت (توسیع) جہلم چوہدری عابد جاوید نے کاشتکاروں کو گندم کی بروقت کاشت اور پیداوار میں اضافہ کے لئے ماہرانہ آگاہی بھی دی۔ علاقہ بھر کے کاشتکاروں کی کثیر تعداد نے اس فارمر ٹرینگ پروگرام برائے گندم 23-2022 میں شرکت کی اور محکمہ زراعت (توسیع)کی کاوشوں کو سراہا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button