موسم سرما کی آمد کے ساتھ ہی خشک میوہ جات کا استعمال اور مانگ بڑھ گئی

جہلم: موسم سرما کی آمد کے ساتھ ہی خشک میوہ جات کا استعمال اور مانگ بڑھ گئیں، چلغوزے کی فی کلوگرام قیمت 12 ہزار روپے تک پہنچ گئی۔ خشک میوہ جات غریب اور سفید پوش طبقہ کے افراد سے کوسوں میل دور ہوتا جا رہاہے ۔

تفصیلات کے مطابق موسم سرما کی آمد کے ساتھ ہی خشک میوہ جات کا استعمال اور مانگ بڑھ جاتی ہے ۔ رواں سال جہاں دیگر اشیا خوردونوش کی قیمتوں میں اضافے کیساتھ خشک میوہ جات کی قیمتیں بھی آسمان سے باتیں کرنے لگیں ہیں۔

اس حوالے شہریوں کا کہنا ہے کہ ابھی موسم سرما پوری طرح شروع بھی نہیں ہوا لیکن خشک میوہ جات کی قیمتیں آسمان سے باتیں کررہی ہیں۔ گزشتہ سال چلغوز و فی کلو گرام8 ہزار روپے فی کلو گرام میں دستیاب تھا مگر اب چلغوزے کی فی کلوگرام قیمت میں 4 ہزار روپے کا اضافہ کر دیاگیا ہے۔

اس طرح رواں سال چلغوذے کا نرخ 12 ہزار روپے فی کلو گرام مقرر کر دیا گیاہے ۔ پستہ چھلکے والا 5 ہزار روپے فی کلو گرام جبکہ بادام 2 ہزار روپے فی کلو میں فروخت ہو رہا ہے۔ خشک میوہ جات کی قیمتوں میں اضافے سے ڈرائی فروٹ کے شوقین نا خوش نظر آتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ وہ موسم سرما میں خشک میوہ جات کا استعمال زیادہ کرتے ہیں، مہمانوں کی تواضع بھی خشک میوہ جات سے کی جاتی ہے تاہم زیادہ قیمتوں کے باعث ان کے لیے ڈرائی فروٹ خریدنا مشکل ہوتا جا رہا ہے۔ موسم سرما میں شہری خشک میوہ جات کا زیادہ سے زیادہ استعمال کرتے ہیں۔

طبی ماہرین کے مطابق ڈرائی فروٹس کھانے سے جہاں شدید سردی میں جسم گرم رہتا ہے وہیں ان کا استعمال بلڈ پریشر اور اعصابی امراض پر قابو پانے کے لیے بھی مفید ہے۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button