کاغذ 200 فیصد مہنگا، درسی کتب، اسٹیشنری کی قیمتیں بڑھ گئیں

جہلم سمیت پنجاب بھر میں تمام اقسام کے کاغذ کی قیمتوں میں 200 فیصد سے زائد کا اضافہ ہونے کے باعث درسی کتب اور تمام اقسام کی اسٹیشنری کی قیمتوں میں بے پنا اضافہ کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ڈالر کی مسلسل اونچی اڑان کے باعث تمام اقسام کے کاغذ کی قیمت میں 200 فیصد سے زائد کے اضافے کے باعث مارکیٹ میں درسی کتب، کاپیاں، تمام اقسام کی اسٹیشنری، اسکول بیگز، یونیفارم، اسکول شوز کی قیمتوں میں بھی اضافہ کر دیا گیا ہے۔

پٹرولیم مصنوعات اور ایل پی جی کی قیمت میں اضافے سے طلبہ و طالبات اور سرکاری ملازمین کی پک اینڈ ڈراپ سروس کی تمام ٹرانسپورٹ کے مالکان نے فی سواری100 فیصد کرایوں میں اضافہ کر دیا ہے جس کیوجہ سے والدین پریشان دکھائی دیتے ہیں۔

دوسری جانب دکانداروں کا کہنا ہے کہ تمام اقسام کی درسی کتب کی قیمت میں 500 روپے سے 1700 روپے تک جبکہ کاپیوں رجسٹر، رف کاپی کی قیمت میں بھی سو فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔ میٹرک کی سائنس پریکٹیکل کاپیوں کی قیمت 2500 روپے سے 3 ہزار روپے تک مقرر کر دی گئی۔

ٹرانسپورٹر کا کہنا ہے کہ پٹرول کی قیمتوں میں کمی نہ ہونے کیوجہ سے گاڑیوں کے سپیئرپارٹس اور موبائل آئل کی قیمتوں میں کمی نہیں کی گئی جس کیوجہ سے مجبوراً کرایوں میں اضافہ کرنا پڑرہاہے۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button