پی ٹی آئی کے آزاد امیدوار کی درخواست پر حلقہ این اے 60 جہلم ون کا حتمی نتیجہ روک دیا گیا

دینہ: لاہور ہائی کورٹ کے بنچ راولپنڈی اور الیکشن کمیشن نے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 60 جہلم ون کا حتمی نتیجہ روک دیا، آزاد امیدوار چوہدری حسن عدیل نے موقف اختیار کرتے ہوئے کہا کہ فارم 45کے مطابق میرے ووٹ ایک لاکھ سے زائد بنتے ہیں اور میری ووٹوں کا اندراج کم کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق حلقہ این اے 60 جہلم ون سے پاکستان تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار حسن عدیل نے لاہور ہائی کورٹ راولپنڈی بینچ میں رٹ دائر کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ فارم 45کے مطابق میرے ووٹ ایک لاکھ سے زائد بنتے ہیں اور میری ووٹوں کا اندراج کم کیا گیا۔

اسی طرح حسن عدیل نے ایک اور درخواست الیکشن کمیشن میں بھی دائر کر رکھی تھی جس پر ہائی کورٹ بنچ نے اور الیکشن کمیشن نے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 60جہلم کا حتمی نتیجہ روک دیا۔

یاد رہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار چوہدری حسن عدیل اور مسلم لیگ (ن) کے بلال اظہر کیانی کے درمیان مقابلہ ہوا تھا جس پر غیر حتمی و غیر سرکاری نتائج کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے امیدوار بلال اظہر کیانی حلقہ این اے 60جہلم سے کامیاب قرار پائے تھے ۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button