واٹس ایپ، سوشل میڈیا پر جعلی لنکس بھیجے جانے کا انکشاف، پی ٹی اے نے خبردار کردیا

پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) کی جانب سے موبائل رجسٹریشن اور سمز کی تعداد جاننے کے حوالے سے صارفین کو سوشل میڈیا پلیٹ فارمز اور ایس ایم ایس کے ذریعے موصول ہونے والے جعلی لنکس بھیجے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

پی ٹی اے کی جانب سے عوام کو دھوکا دہی پر مبنی لنکس کے حوالے سے خصوصی ہدایات کردی گئیں۔

پی ٹی اے کے آفیشل ٹوئٹر اکاونٹ پر جاری پریس ریلیز میں انکشاف کیا گیا کہ واٹس ایپ، سوشل میڈیا ایپلی کیشن اور ٹیکسٹ میسجز کے ذریعے صارفین کو دھوکا دہی پر مبنی لنکس بھیجے جارہے ہیں۔

پی ٹی اے نے عوام کو خبردار کیا کہ یہ لنکس پی ٹی اے کے ڈیوائس آئیڈ ٹیکسیشن رجسٹریشن اینڈ بلاکنگ سسٹم ( ڈی آئی آر بی ایس ) سے منسلک نہیں ہیں۔

پریس ریلیز میں مزید بتایا گیا کہ دھوکہ دہی پر مبنی میسجز میں صارفین کو بتایا جاتا ہے کہ صارف کی سم ’مشکوک سرگرمیوں‘ میں ملوث پائی گئی ہے اور صارف کو دیے گئے لنک پر سِم کی تعداد چیک کرنے کو کہا جاتا ہے۔

اسی طرح ایک اور گمراہ کن پیغام کے ذریعے کہا جارہا ہے کہ ہے کہ فراہم کردہ لنک پر کلک نہ کرنے کی صورت میں صارف کی فون رجسٹریشن معطل کر دی جائے گی۔

پاکستان ٹیلی کمیونیکشن کی جانب خبردار کیا گیا کہ ایسے گمراہ کن پیغامات پر عوام توجہ نہ دیں، لنک کلک کرنے کی صورت میں آپ کی ذاتی معلومات چوری کی جاسکتی ہیں۔

پی ٹی اے کی جانب سے کہا گیا کہ عوام سے اپیل کی جاتی ہے کہ وہ نا معلوم نمبروں سے موصول ہونے والے لنکس پر کلک کرنے سے گریز کریں اور پی ٹی اےکے شکایت مینجمنٹ سسٹم پر رابطہ کریں۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button