عام انتخابات؛ جہلم میں نئے امیدواروں نے بھی صف بندیوں کا آغاز کر دیا

جہلم: آمدہ انتخابات کے حوا لے سے مختلف سیاسی جماعتوں کے گروپوں سمیت انتخابی میدان میں نئے امیدواروں نے بھی صف بندیوں کا آغاز کر دیا، ضلع جہلم کی 2 قومی اور 3 صوبائی نشستوں کے لئے درجنوں امیدوار لنگوٹ کس کے میدان میں اترنے کے لئے تیارہیں۔

اس حوالے سے تحصیل سوہاوہ ، تحصیل دینہ، تحصیل جہلم اور تحصیل پنڈدادنخان میں سیاسی جماعتوں کے امیدواروں سمیت آذاد امیدواروں نے بھی اپنے اپنے پینل تشکیل دینے کے لئے سردھڑ کی بازیاں لگانی شروع کررکھی ہیں۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ جہلم لِلہ ڈیول کیرج وے ، جلالپور شریف کندوال نہر، ٹوبہ ٹراما سینٹر، جہلم ٹراما سینٹر، وچلہ بیلا پل سمیت دیگر ایسے منصوبے موجود ہیں جن کے لئے فنڈز جاری نہیں کئے گئے۔ جس کیوجہ سے تخمینے میں کئی گنا اضافے کا خدشہ لاحق ہے ۔

علاقہ مکینوں کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ پی ڈی ایم حکومت نے جان بوجھ کر اور مقامی نمائندوں کی عدم دلچسپی کیوجہ سے فنڈز کا اجراء نہیں ہو سکا۔ عوامی فلاح کے منصوبے نامکمل ہونے کیوجہ سے ووٹرز میں پاکستان مسلم لیگ ن، پاکستان پیپلز پارٹی کے بارے سخت نفرت پائی جاتی ہے ۔

ووٹرز کا کہنا ہے کہ عوامی منصوبوں کو روکنا ضلع جہلم کے عوام کے ساتھ زیادتی کے مترادف ہے ۔ اگر فلاحی منصوبوں پر کام کا آغاز نہ کروایا گیا اور فنڈز جاری نہ کئے گئے تو ووٹرز آمدہ انتخابات کے موقع پر بائیکاٹ کرنے کی چہ منگوئیاں بھی کر رہے ہیں ۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button