یورپی یونین، پاکستان میں ہونے والے انتخابات کے جائزے کیلئے اپنے نمائندے بھیجے، PTI یورپ کا مظاہرہ

برسلز: پی ٹی آئی یورپ نے یورپین یونین سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ 8فروری کو پاکستان میں ہونے والے انتخابات کاجائزہ لینے کیلئے اپنے نمائندے بھیجے۔

یہ مطالبہ تحریک انصاف یورپ کی جانب سے یورپین پارلیمنٹ کے سامنے منعقدہ احتجاجی مظاہرے میں مقررین نے کیا۔ تحریک انصاف بلجیم کی میزبانی کے ساتھ لکسمبرگ اسکوائر برسلز میں منعقد ہونے والے اس مظاہرے میں منفی 5درجہ حرارت اور سخت موسم کے باوجود فرانس، جرمنی، سوئٹزرلینڈ، ڈنمارک، آسٹریا، سپین، نیدرلینڈز، برطانیہ، آئرلینڈ اور دیگر ممالک سے لوگوں نے شرکت کی۔

اس مظاہرے سے جن مقررین نے خطاب کیا ان میں صاحبزادہ امیر جہانگیر، ملک عمران خلیل، غلام ربانی بابو، میاں شعیب، شعیب خان، روبینہ خان، وسیم ملک، یاسر قدیر، ذوالفقار جتالہ، مس لبنیٰ، عمر رحمٰن ، غلام حسین کیانی، آصف برلاس اورعاطف الیاس کے علاوہ دیگر مقررین شامل تھے۔

مقررین نے یورپین یونین کو مخاطب کرتے ہوئے پاکستان میں پارٹی کے سربراہ عمران خان سمیت کارکنوں پر قائم مقدمات کو پاکستانی آئین میں دئیے گئے تحفظات کی صریح خلاف ورزی قرار دیا۔ مقررین نے آئندہ الیکشن میں پارٹی کے انتخابی نشان سے متعلق عدالتی فیصلے پر بھی تنقید کی ۔

مقررین نے کہا کہ پاکستان میں ان کی پارٹی کے کارکنوں کی جس طرح سیاسی عمل میں شرکت کو مشکل بنایا جارہا ہے اس سے غصے اور نفرت میں اضافہ ہورہا ہے۔ انہوں نےکہاکہ ان کی پارٹی کیلئے مختلف انتخابی نشان کوئی معنی نہیں رکھتے کیونکہ اب سابق وزیراعظم عمران خان کا نام ہی پی ٹی آئی کا انتخابی نشان ہے۔

مقررین نے پاکستان میں اپنی پارٹی کے اسیر خواتین و حضرات کو بھی خوب سراہا اور انہیں پارٹی کا حقیقی سرمایہ قرار دیتے ہوئے ان کی تحسین کی جبکہ پاکستان میں موجود دوسری سیاسی پارٹیوں پر زور دیا کہ وہ اپنے ذاتی مفاد کو قومی مفاد پر ترجیح دیتے ہوئے غیر سیاسی قوتوں کے آلہ کار نہ بنیں۔

اس موقع پر وقفوں وقفوں کے ساتھ نعرے بازی بھی کی جاتی رہی اور پارٹی ترانوں پر گرمجوشی اور والہانہ پن کا مظاہرہ کیا گیا۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button