بغیر ہیلمٹ موٹرسائیکل سواروں کیخلاف پنجاب پولیس کا نیا ہتھیار کیا ہے؟

بغیر ہیلمٹ موٹرسائیکل سوار، اب ہوجائیں ہوشیار! پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی نے بغیر ہیلمٹ موٹر سائیکل چلانے والوں کو ٹریس کرنے کا اپنی نوعیت کا پہلا سوفٹ ویئر تیار کر لیا ہے، آئی جی پنجاب پولیس کے مطابق سوفٹ ویئر کے ذریعے ٹریس ہونے والے بغیر ہیلمٹ موٹر سائیکل سواروں پر جرمانہ عائد ہو گا۔

ترجمان پنجاب پولیس کے مطابق آرٹیفیشل انٹیلیجنس بیسڈ سوفٹ ویئر ایس ایس پی رفعت بخاری نے ایم ڈی سیف سٹیزاحسن یونس کی قیادت میں تیار کیا ہے، جس کی مدد سے ہیلمٹ کے استعمال کو یقینی بنانے میں مدد ملے گی۔

آئی جی پنجاب پولیس ڈاکٹرعثمان انورکا کہنا ہے کہ پنجاب پولیس آرٹیفیشل انٹیلی جنس بیسڈ جدید ٹیکنالوجی کے ذریعے ٹریفک قوانین کا نفاذ یقینی بنا رہی ہے، پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی کے سی سی ٹی وی کیمرے سوفٹ ویئر کی مدد سے بغیر ہیلمٹ موٹر سائیکلز چلانے والوں کی نشاندہی کریں گے۔

’سوفٹ ویئر کے ذریعے ٹریس ہونے والے بغیر ہیلمٹ موٹر سائیکل سواروں کو جرمانہ عائد ہو گا، بغیر ہیلمٹ موٹر سائیکل سواروں کی نشاندہی، جرمانوں سے شہری ٹریفک قوانین پر زیادہ سنجیدگی سے عمل درامد کریں گے۔‘

آئی جی پنجاب پولیس ڈاکٹر عثمان انور کے مطابق شہری دوران سفر حادثات اور بھاری جرمانے سے محفوظ رہنے کے لئے ہیلمٹ کا استعمال یقینی بنائیں، لاہور ہائی کورٹ کے احکامات کے تحت بغیر ہیلمٹ موٹر سائیکل چلانے پر 2 ہزار روپے جرمانہ ادا کرنا ہو گا۔

ایم ڈی سیف سٹیز اتھارٹی احسن یونس کے مطابق پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی کا تیار کردہ ہیلمٹ کی خلاف ورزی ٹریس کرنے کا یہ اپنی نوعیت کا پہلا انفرادی سوفٹ ویئر ہے، آرٹیفیشل انٹیلی جنس بیسڈ سوفٹ ویئر ٹیکنالوجی کے ذریعے پنجاب پولیس کی پولیسنگ صلاحیتوں میں یقینی اضافہ ہوگا۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button