ایک ہفتے میں 58 لاکھ افراد کی مسجد نبوی ﷺ کی زیارت

مدینہ منورہ: صرف ایک ہفتے کے دوران 58 لاکھ 32 ہزار 384 افراد نے مسجد نبوی کی زیارت کرلی۔

سعودی میڈیا نے اعداد و شمار میں بتایا ہے کہ 5 لاکھ 50 ہزار 911 افراد نے سلام پیش کیا، ایک لاکھ 30 ہزار 401 مرد اور ایک لاکھ 15 ہزار 551 خواتین نے روضہ اطہر میں نماز ادا کی، 12 ہزار 110 افراد نے معذوروں اور معمر افراد کو پیش کی جانے والی سہولت سے فائدہ اٹھایا۔

اعداد و شمار میں کہا گیا ہے کہ ایک لاکھ 48 ہزار 858 افراد کو مسجد نبوی شریف میں رہنمائی پیش کی گئی، مذکورہ عرصے کے دوران زائرین کو زمزم کی ایک لاکھ 23 ہزار 200 بوتلیں اور 99 ہزار 832 إفطار پیکٹ پیش کیے گئے، مسجد نبوی ﷺ کی انتظامیہ نے تمام زائرین کو سہولیات فراہم کرنے کے انتظام سرانجام دیئے۔

بتایا جارہا ہے کہ سعودی عرب نے مسجد نبوی ﷺ آنے والے زائرین کے لیے 5 ضوابط کی پابندی لازمی قرار دی ہے، اس ضمن میں وزارت حج و عمرہ نے کہا ہے کہ مسجد نبوی ﷺ میں سامان کی حفاظت کے لیے پانچ ضوابط کی پابندی کی جائے گی، زائرین اپنا سامان مسجد نبوی ﷺ کے اندر لے جانے سے گریز کریں اور ہر قسم کا سامان باہر ’امانت گھر‘ میں جمع کرایا جائے۔

ایک بیان میں وزارت حج و عمرہ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ بڑے سائز کے بیگ مسجد نبوی ﷺ کے اندر لے جانے کی بالکل بھی اجازت نہیں ہے، ایسا سامان مسجد نبوی ﷺ کے صحنوں میں بھی نہیں لایا جاسکتا ہے اور نہ ہی امانت گھر میں رکھوانے کی اجازت ہے، زائرین کی سہولت کے لیے بیرونی صحنوں میں بنائے گئے ’امانت گھر‘ میں چھوٹے سائز کے بیگ ہی جمع کرائے جاسکتے ہیں۔

معلوم ہوا ہے کہ مسجد نبویﷺ کے امور کے لیے جنرل پریذیڈنسی کی ایجنسی 600 مشینوں اور آلات کے ذریعے صفائی کے کام کی کارکردگی بہتر بنا رہی ہے، یہ مشینیں انسانی نظم و نسق یا مصنوعی ذہانت کی ٹیکنالوجی کے ذریعے خودکار طریقے سے چل رہی ہیں، جن کے ذریعے مسجد نبوی ﷺ میں صفائی اور ماحول کو جراثیم سے پاک کرنے کے آپریشن کیے جاتے ہیں، اس مقصد کے لیے یہ مشینیں دن رات چوبیس گھنٹے کام کرتی ہیں تاکہ ماحول دوست مواد استعمال کرکے نمازیوں کو محفوظ اور صحت مند ماحول فراہم کیا جا سکے۔

اسی طرح مسجد نبویﷺ جانے کے لیے استعمال ہونے والے راستوں پر فضا میں خوشبوئیں بکھیرنے کیلئے سمارٹ ڈیوائسز کا استعمال شروع کیا گیا ہے اور مسجد نبوی ﷺ کی طرف جانے والے حجاج کرام کی سڑکوں پر خوشبو کے اسپرے کرنے والے آلات نصب کر دیے گئے ہیں، اس مقصد کے لیے حکام نے ایسے سمارٹ آلات متعارف کرائے ہیں جو اسلام کے دوسرے مقدس ترین مقام مسجد نبوی ﷺ کی طرف جانے والے زائرین کے زیر استعمال سڑکوں پر ہوا میں خوشبو چھڑکیں گے، مدینہ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی جانب سے نصب کیے گئے آلات کو مسجد کے شمالی جانب اسٹورز کے قریب بیٹھنے کی جگہ پر بھی نصب کیا گیا ہے۔

متعلقہ ادارے نے کہا ہے کہ یہ اقدام مدینہ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی جانب سے مسجد نبوی ﷺ میں جانے والے نمازیوں اور زائرین کی خدمت کے لیے کیے گئے اقدامات اور انسان دوست شہروں کے منصوبوں کا ایک حصہ ہے جو مقدس مقام کے ارد گرد کے مناظر کو فروغ دینے کی کوششوں کے حصے کے طور پر سامنے آیا ہے، مرکزی علاقے میں لاگو کیے گئے منصوبے درجہ حرارت کو کم کرنے والے مواد اور طریقوں کے استعمال پر مبنی ہیں جیسے کہ سڑکوں کے کنارے درخت لگانا، بیٹھنے کی جگہیں مختص کرنا، فٹ پاتھوں اور پیدل چلنے والے علاقوں کو نان ہیٹنگ ماربل کے ساتھ کوٹنگ کرکے درجہ حرارت کو کم رکھنے کے لیے غیر مجاز گاڑیوں کو داخلے سے روکنا شامل ہے۔

اسی سلسلے میں ہوٹلوں سے براہ راست مسجد نبوی ﷺ تک پیدل چلنے والوں کی نقل و حرکت کو آسان بنانے کے لیے راستے فراہم کیے گئے ہیں، مزید برآں دن کی روشنی میں مسجد کے شمالی، جنوبی اور مغربی صحنوں میں 245 سے زائد چھتریاں پھیلی ہوئی ہیں، جن میں اسپرے پنکھے لگے ہوئے ہیں تاکہ درجہ حرارت کو ٹھنڈا کیا جا سکے، نمازیوں کو صحت مند اور محفوظ ماحول فراہم کیا جا سکے اور انہیں دھوپ سے بچایا جا سکے۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button