میونسپل کمیٹی جہلم کے درجہ چہارم کا معمولی ملازم شہر کے لیے سکیورٹی رسک

جہلم: میونسپل کمیٹی کے درجہ چہارم کا معمولی ملازم شہر کے لیے سکیورٹی رسک، اہلکار وں کی سر پرستی میں غیر قانونی جمعہ بازار بھی لگوا ئے جانے لگے۔ اپنی جیبیں گرم کرنے کے لیے میونسپل کمیٹی کے شعبہ انکروچمنٹ نے سڑکیں ملازمین کے حوالے کر دیں۔ جمعہ کے روز سڑکیں تنگ گلیوں میں تبدیل ، اہلکار رشوت کے عوض سڑکیں ٹھیکے پر چرھانے میں مشغول ہیں۔

تفصیلات کے مطابق میونسپل کمیٹی ک جہلم کے شعبہ انکروچمنٹ کے ملازمین جمعہ اور عام دنوں میں علی الصبح بازاروں میں پہنچ جاتے ہیں اور اپنی سرپرستی میں ریڑھیاں اور لوڈر رکشے کھڑے کروا دیتے ہیں جس سے کشادہ بازار اور سڑکیں تنگ گلیوں میں تبدیل ہو جاتی ہیں۔

اگر کوئی شہری تجاوزات مافیا سے راستہ کھولنے یا ریڑھیاں پیچھے ہٹانے کی بابت بات کرے تو بااثر قبضہ مافیا شہریوں سے گالی گلوچ ،لڑائی جھگڑے پر اتر آتے ہیںجبکہ میونسپل کمیٹی کے شعبہ انکروچمنٹ کے ملازمین نے اپنی سرپرستی میں اندرون شہر کے بازاروں ، گلی محلوں ، چوک چوراہوں میں تجاوزات مافیا کو سڑکوں پر تجاوزات قائم کرنے کے لائسنس جاری کررکھے ہیں۔

شہریوں نے ڈپٹی کمشنر سے مطالبہ کیاہے کہ اندرون شہر قائم ہونے والی تجاوزات کے خاتمے کے لئے کردار ادا کریں اور تجاوزات قائم کرنے والے دکانداروں کے خلاف قانونی کارروائیاں عمل میں لائیں تاکہ شہر کی سڑکیں ، بازار چوک چوراہے کشادہ ہو سکیں۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button