جہلم: قصابوں کا دستور نرالا، بیمار اور لاغر مادہ جانوروں کا گوشت فروخت ہونے لگا

جہلم: قصابوں کا دستور نرالا، بیمار اور لاغر مادہ جانوروں کا گوشت فروخت ہونے لگا، شہر سمیت ضلع بھر میں قصابوں کی الگ بادشاہت قائم ، شہری لٹنے پر مجبور ہیں۔

تفصیلات کے مطابق جہلم شہر سمیت ضلع بھر کے قصابوں نے جنگل کا قانون نافذ کر کے لوٹ مارکا بازارگرم کررکھا ہے ،قصابوں نے مادہ جانوروں سمیت لاغر ، بیمار، نیم مردہ جانوروں کا گوشت مہنگے داموں فروخت کرنا شروع کررکھا ہے۔

دوسری جانب قصاب گائے اور بکرے کا گوشت سرکاری نرخوں پر فروخت کرنے سے عاری ہیں کیونکہ مادہ جانور کے گوشت کی قیمت بکرے کے گوشت کی قیمت سے کئی گنا کم ہوتی ہے اور بکریاں تلاش کرنا انتہائی آسان کام ہے جس کی وجہ سے بکریاں تلاش کرکے شہریوں کو مادہ جانوروں کا گوشت مہنگے داموں فروخت کیا جارہاہے۔

اس حوالے سے محکمہ لائیو سٹاک کا عملہ خواب خرگوش کے مزے لینے میں مصروف ہے ۔ دوسری جانب پرائس کنٹرول مجسٹریٹس بھی گراں فروشوں کے خلاف کارروائیاں کرنے سے گریزاں ہیں ۔ جبکہ پنجاب فوڈ اتھارٹی اور اسسٹنٹ کمشنر قصابوں کو چیک کرنے کی ضرورت ہی محسوس نہیں کرتے۔

صارفین نے ڈپٹی کمشنر ایڈوائزر محتسب اعلیٰ پنجاب جہلم سے مطالبہ کیا ہے کہ شہر سمیت ضلع بھر کے قصابوں کی طرف سے نافذ جنگل کے قانون کے خاتمے اور قانون کا مذاق اڑانے والے قصابوں کے خلاف فوجداری مقدمات درج اور جرمانے کئے جائیں تاکہ غریب، سفید پوش طبقہ سے تعلق رکھنے والے افرادحفظانِ صحت کے اصولوں کے مطابق سرکاری نرخوں پر صحت مند جانوروں کا گوشت استعمال کر سکیں۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button