مالی فراڈ کیس میں فواد چوہدری کی ضمانت منظور

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹس اسلام آباد نے مالی فراڈ کے کیس میں سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری کی ضمانت بعد از گرفتاری منظور کر لی۔

جہلم اپڈیٹس کے مطابق سول جج ڈاکٹر سہیل نے فواد چوہدری کی درخواست ضمانت پر محفوظ فیصلہ سنایا۔

عدالت نے فواد چوہدری کی ضمانت ایک لاکھ روپے مچلکوں کے عوض منظور کی۔

سابق وفاقی وزیر پر شہری سے 50 لاکھ روپے لے کر نوکری نہ دینے کا الزام ہے۔

واضح رہے کہ 4 نومبر 2023 کو فواد چوہدری کو اسلام آباد سے گرفتار کرلیا گیا تھا، اگلے روز فواد چوہدری کو منہ پر کپڑا ڈال کر ہاتھوں میں ہتھکڑی لگا کر بکتر بند گاڑی میں اسلام آباد کچہری پہنچایا گیا تھا، فواد چوہدری کو 2 روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا گیا تھا۔

پولیس نے ایف آئی آر کا متن پڑھتے ہوئے عدالت کو بتایا تھا کہ فواد چوہدری نے بطور وفاقی وزیر نوکری کا جھانسہ دے کر 50 لاکھ روپے وصول کیے تھے تاہم فواد چوہدری نے نوکری کا وعدہ پورا نہ کیا۔

فواد چوہدری کو ظہیر نامی شخص کی جانب سے درج ایف آئی آر میں گرفتار کیا گیا تھا، ایف آئی آر عدالت میں پڑھ کر سنائی گئی تھی۔

پولیس نے کہا تھا کہ فواد چوہدری نے شہری سے50 لاکھ روپے لیے تھے، نوکری کا وعدہ کیا تھا، نوکری نہیں دی گئی، جب پیسے واپس لینے کا تقاضا کیا تو جان سے مارنے کی دھمکی دی گئی

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button