ادویات کی قیمتوں کے بعدسرکاری ہسپتالوں میں تشخیصی ٹیسٹوں کی فیسوں میں اضافے کا فیصلہ

جہلم: پنجاب کی موجودہ نگران حکومت نے جہلم سمیت پنجاب بھر کے سرکاری ہسپتالوں میں 800 سے زائد مختلف ٹیسٹوں کی فیسیں بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے تاہم فیس میں اضافے کی حتمی منظوری پنجاب کی صوبائی کابینہ دے گی۔

محکمہ صحت کے ذرائع کے مطابق سابق دور حکومت میں مذکورہ ٹیسٹوں کی فیسیں بڑھانے کا اصولی فیصلہ کرتے ہوئے 2019ء میں باقاعدہ نوٹیفکیشن جاری کیا گیا لیکن اس وقت کی صوبائی حکومت نے عوامی تنقید کے باعث نوٹیفکیشن واپس لے لیا تھا ،جسے اب محکمہ صحت پنجاب نے دوبارہ بحال کرنے کی استدعا کی ہے۔

اس سلسلے میں محکمہ صحت پنجاب کا کہنا ہے کہ ٹیسٹوں کی فیسوں میں اضافے سے پنجاب حکومت کو 10 ارب روپے جمع ہونے کا امکان ہے۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button