دینہ کے مشہور قتل کیس میں عدالت نے خاتون سمیت 3 ملزمان کو بری کر دیا

جہلم: ایڈیشنل سیشن جج نے قتل میں ملوث ملزمان کو شک کا فائدہ دیتے ہوئے بری کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق ایڈیشنل سیشن جج جہلم قذافی بن زار نے نزاکت علی ولد محمد غضنفر ساکن گوجر خان ضلع راولپنڈی کے حقیقی بھائی کے قتل کا فیصلہ سناتے ہوئے ملزمان ندیم احمد ولد مشتاق احمد ساکن موہڑہ ملکاں گوجر خان، بشری از رم دختر از رم حسین ساکن تا جو جھنگی گوجر خان اور عبد اللہ شکیل ولد شکیل انور ساکن گوجر خان کو شک کا فائدہ دیتے ہوئے مقتول رفاقت علی کے قتل کے مقدمہ سے بری کر دیا۔

یاد رہے مقتول کے قتل ہونے پر 3 جون 2022کو مقدمہ نمبر 435 بر خلاف ملزمان مذکورہ تھانہ دینہ میں درج کیا گیا تھا ملزمان کے کیس کی پیروی ایڈوکیٹ چوہدری عثمان خالد و چو ہدری محمد طیب ایڈووکیٹ ملزمہ بشریٰ از رم کی وکالت میاں عامر حیات ایڈووکیٹ اور عبداللہ شکیل کی وکالت راجہ قدیر عباس ایڈووکیٹ نے کی تھی۔

یہ کیس تقریباً ڈیڑھ سال سیشن کورٹ میں سماعت رہنے کے بعد اور وکلاء کے دلائل سننے کے بعد معزز عدالت نے ملزمان کو شک کا فائدہ دیتے ہوئے باعزت بری کر دیا ہے۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button