شدید سردی کے ساتھ ہی لنڈا بازاروں میں گرم ملبوسات کی خریداری کیلئے شہریوں کا رش امڈ آیا

جہلم: شدید سردی کے ساتھ ہی لنڈا بازاروں میں گرم ملبوسات کی خریداری کیلئے شہریوں کا رش امڈ آیا۔

اقبال لائبریری روڈ، یادگار میجر اکرم شہید ، سول لائن روڈ، جنرل بس اسٹینڈ، بلال ٹاؤن ، کالا گجراں، روہتاس روڈ چوک، ماڈرن بازار سمیت دیگر جگہوں پر لنڈے کے کوٹ، پتلون ، جیکٹس ، جرسیاں ، جرابیں، مفرل، سوئیٹر اور دیگر گرم ملبوسات فروخت کرنے کے لئے میلہ لگا ہوا ہے۔

شاندار چوک کے چاروں اطراف اور دیگر مقامات پر ٹریفک کا جام رہنا روزانہ کا معمول بن چکا ہے۔ ریڑھیوں، لوڈر رکشوں پر بھی لنڈے کے کپڑے فروخت کئے جا رہے ہوتے ہیں۔ سڑکوں پر لنڈا تجاوزات قائم ہونے سے ٹریفک روانی بری طرح متاثر ہو جاتی ہے۔

ٹریفک پولیس کے ساتھ ساتھ میونسپل کمیٹی کے چیف آفیسر ،انسداد تجاوزات عملے نے آنکھیں بند کر رکھی ہیں اور کمائی کا ذریعہ بنا رکھا ہے۔ لوگوں بالخصوص خواتین اور بچوں کا سڑکوں پر پیدل گزرنا محال ہوجاتاہے جس کی وجہ سے شہریوں اور دکانداروں کے مابین گالی گلوچ ، لڑائی جھگڑا روزانہ کا معمول بن چکا ہے۔

لنڈا فروخت کرنیوالوں نے مختلف مقامات پر مستقل بنیادوں پر اڈے قائم کر رکھے ہیں اور ٹولیوں کی صورت میں سڑکوں پر کھڑے ہو کر گرم ملبوسات فروخت کرنے کے لئے آوازیں کستے دکھائی دیتے ہیں ۔ جس کے باعث سڑکیں بلاک ہو جاتی ہیں۔ ٹریفک روانی میں رکاوٹ پیدا ہونے سے گاڑیوں کی بعض اوقات لمبی قطاریں لگ جاتی ہیں۔ ایمبولینس ، فائر بریگیڈ گاڑیوں کا گزرنا بھی مشکل ہو جاتا ہے۔

اس امر پر شہریوں نے ڈپٹی کمشنر ، ایڈمنسٹریٹر میونسپل کمیٹی ، چیف آفیسر میونسپل کمیٹی سے نوٹس لینے اور تجاوزات کے خاتمے کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button