نئی حلقہ بندیوں پر اعتراضات پر سماعت کب ہو گی؟ الیکشن کمیشن کا بڑا فیصلہ

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے فیصلہ کیا ہے کہ حلقہ بندیوں پر اعتراضات کی سماعت عام انتخابات کے بعد کی جائے گی۔

الیکشن کمیشن کے مطابق اس وقت اگر اعتراضات کی سماعت کی گئی تو 8 فروری کے الیکشن پروگرام پر منفی اثرات مرتب ہوں گے۔

واضح رہے کہ پاکستان کی بڑی سیاسی جماعت مسلم لیگ ن سمیت دیگر نے نئی حلقہ بندیوں پر اعتراضات اٹھائے ہوئے ہیں۔

’شہبازشریف کی اتحادی حکومت کے آخری ایام میں نئی مردم شماری کی منظوری دی گئی تھی جس کے بعد الیکشن کمیشن نے نئی حلقہ بندیاں کی ہیں اور اسی وجہ سے 90 روز میں انتخابات کا انعقاد بھی ممکن نہیں ہو سکا تھا‘۔

حلقہ بندیوں پر اعتراضات کی سماعت فوری نہ کرنے کی ایک بڑی وجہ یہ بھی ہے کہ سپریم کورٹ آف پاکستان نے احکامات دیے ہیں کہ انتخابات ہر صورت 8 فروری کو کروائے جائیں اور تاخیر کے سارے دروازے بند کر دیے ہیں۔

انتخابات 8 فروری سے آگے نہ جانے کے لیے گزشتہ دنوں سپریم کورٹ نے ہنگامی سماعت کرتے ہوئے لاہور ہائیکورٹ کا ایک فیصلہ بھی معطل کیا تھا۔

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے 8 فروری 2024 میں عام انتخابات کی تاریخ کا اعلان کر رکھا ہے، الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری شیڈول کے مطابق کاغذات نامزدگی جاری کرنے کی آخری تاریخ 24 دسمبر ہے۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button