شدید سردی؛ شرح اموات میں اضافہ، جہلم میں ایک ہی دن میں 3 افراد چل بسے

جہلم: سردی کی شدت میں اضافے کیسا تھ ہی شرح اموات میں بھی اضافہ ہو گیا۔ شہر سمیت مضافاتی علاقوں میں اتوار کے روز تین افراد راہ عدم سدھار گئے، مرنے والوں میں ایک نوجوان بھی شامل ہے۔

دسمبرکے وسط میں سردی کی شدت بڑھتے ہی مناسب وسائل نہ ہونے پر کمزور صحت افراد دنیاء فانی سے رخصت ہونے لگے۔ اتوار کے روز جہلم شہر اورملحقہ علاقوں میں ایک ہی روز آگے پیچھے تین افراد چل بسے، جن میں 70 سالہ دکاندار محمد افضل ، 55 سالہ ریاض شاہ اور 18 سالہ نوجوان سفیان شامل ہیں، اس کے علاوہ شہر کی مساجد میں بھی لوگوں کے مرنے کے اعلانات سننے کو ملتے رہے۔

شہری حلقوں کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ اس پرفتن مہنگائی کے دورمیں غریب افراد اپنا تن اور ادویات خریدنے کی سکت کھو چکے ہیں جس کی وجہ سے اموات میں بھی اضافہ ہو رہا ہے۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ حکمران اشیاء خوردونوش سمیت اشیاء ضروریہ کی قیمتیں کم کروائیں تاکہ شہری اپنا تن ڈھانپنے کے ساتھ ساتھ پیٹ بھر کر کھانا کھا سکیں اور مریض ادویات خرید کا اپنا علاج معالجہ کرواسکیں۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button